اسلام آباد (قدرت روزنامہ16فروری2017)سعودی عرب کے فرماں روا شاہ سلمان بن عبدالعزیز سے الیمامہ محل میں ترک صدر رجب طیب ایردوآن نے منگل کے روز ملاقات کی ہے اور ان سے دو طرفہ تعلقات ، خطے میں ہونے والی تازہ پیش رفت اور اہم علاقائی امور پر تبادلہ خیال کیا ہے.

دونوں رہ نماؤں نے بات چیت میں دونوں برادر ملکوں کے درمیان تعلقات اور تعاون کے مختلف پہلوؤں کا تفصیلی جائزہ لیا ہے.

بات چیت کے اس دور میں سعودی عرب کے شہزادے ،بعض وزراء اور سینیر عہدہ دار بھی شریک تھے.

جمہوریہ ترکی کے صدر رجب طیب ایردوآن سوموار کو سعودی عرب کے سرکاری دورے پر الریاض پہنچے تھے. شاہ خالد بین الاقوامی ہوائی اڈے پر شاہ سلمان بن عبدالعزیز نے بہ نفس نفیس ان کا خیرمقدم کیا تھا.

اس موقع پر گورنر الریاض شہزادہ فیصل بن بندر بن عبدالعزیز ،وزیرخارجہ عادل بن احمد الجبیر ،ترکی میں سعودی عرب کے سفیر ولید الخریجی اور الریاض میں ترک سفیر یونس ضمیر اور دوسرے سینیر فوجی اور سول عہدہ دار بھی موجود تھے.

ترک صدر خطے کے ملکوں کے دورے پر ہیں. وہ اتوار کو دورے کے پہلے مرحلے میں بحرین پہنچے تھے جہاں انھوں نے بحرین کے شاہ حمد اور دوسرے عہدہ داروں سے ملاقات کی تھی.انھوں نے منامہ میں صحافیوں سے گفتگو کرتے ہوئے شمالی شام میں ایک محفوظ زون کے قیام کی ضرورت پر زوردیا تھا تاکہ وہاں جنگ کے نتیجے میں بے گھر ہونے والے شامیوں کو ٹھہرایا جاسکے.

سعودی وزیر خارجہ عادل الجبیر نے گذشتہ ہفتے انقرہ میں نیوز کانفرنس میں کہا تھا کہ ان کا ملک اور ترکی شام کے بارے میں یکساں موقف کے حامل ہیں.

ترک صدر آج الریاض سے قطر روانہ ہونے والے تھے. واضح رہے کہ ترکی کے قطر کے ساتھ برسوں سے مضبوط تعلقات استوار ہیں اور قطر میں ترکی کا ایک فوجی اڈا بھی ہے.