مقبوضہ کشمیر کے ضلع کولگام میں صبح سویرے بھارتی کیمپ کا بڑا حملہ

سرینگر(قدرت روزنامہ15-فروری-2017)بھارتی سکیورٹی ذرائع کے مطابق مقبوضہ کشمیر کے ضلع کولگام میں صبح سویرے بھارتی کیمپ کا بڑا حملہ جس میں بھارتی میجر سمیت چار فوجی واصل جہنم ہوگئے ، . ذرائع کے مطابق مجاہدین کےساتھ جھڑپ کے دوران انڈین آرمی کا میجر ستیش دہیا زخمی ہوگیا تھا جو بعد ازاں ہسپتال میں ہی دم توڑ گیا ، جبکہ شمالی کشمیر کے علاقے ہندواڑہ میں تین عسکریت پسند ایک تصادم میں جاں بحق ہوگئے .

پولی سکے ڈپٹی انسپکٹر جنرل ، شمالی کشمیر نتیش کمال نے بتایا کہ سکوپ اورسرچ آپریشن کے دوران عسکریت پسند ایک گھر میں چھپے ہوئے تھے کہ انہوںنے سکیورٹی فورسز پر جوابی فائرنگ کی سکیورٹی فورسز کی قیادت میجر داہیا کررہے تھے . جھڑپ صبح سویرے ساڑھے پانچ بجے شروع ہوئی . اس دوران ایک میجر اورچاربھارتی فوجی واصل جہنم ہوگئے جبکہ عسکریت پسند جن کا تعلق عسکریت پسند تنظیم لشکر طیبہ کےساتھ تعلق رکھتے تھے اورایک غیرملکی بتایا جاتا ہے . . ہلاک ہونےوالے فوجی جوانوں میں اترکھنڈ کے چھاتہ بردار دھرمندر کمار ، جموں وکشمیر رائفل مین روی کمار اور اتر پردیش کے گنر استوش کمار تھے ، اتوار کے بعد مقبوضہ کشمیر میں یہ تیسری جھڑپ ہے . جس میں عسکریت پسندوں کو بھی قتل کردیا گیا . وادی کشمیر میں قتل عام کے بعد ، حالات کشیدہ ، ایک شہری کی ہلاکت کےخلاف لوگوں کی بڑی تعداد سڑکوں پر نکل آئی جو کولگام چلو مارچ میں شامل ہوگئی جو کہ اب پرتشدد صورتحال اختیار کر گئی ہے...


قدرت میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں
Loading...

تازہ ترین

To Top