بھارت میں جنسی زیادتی کے بڑھتے ہوئے واقعات نے پورے ہندوستانی معاشرے کی جڑوں کو کھوکھلا کر دیا ہے

نئی دہلی(قدرت روزنامہ12فروری2017)بھارت میں جنسی زیادتی کے بڑھتے ہوئے واقعات نے پورے ہندوستانی معاشرے کی جڑوں کو کھوکھلا کر دیا ہے ،جنسی زیاتی کے تازہ ہولناک واقعہ نے پورے بھارت کو ہلا کر رکھ دیا ہے ،جے پور میں واقع سکول میں استاد کے روپ میں ایسے درندے کی گھناؤنی کرتوتوں کا انکشاف ہوا ہے جو 200سے زائد کم سن اور معصوم طلبا ء کو نہ صرف اپنی جنسی ہوس کا نشانہ بنا چکا ہے بلکہ بچوں کی موبائل سے ویڈیو بنا کر ان سے رقم بھی بٹورتا تھا ،مطالبہ پورا نہ ہونے پر ’’ہوس کا مارا استاد ‘‘بچوں کی ویڈیوز منظر عام پر لانے اور کلاس میں فیل کرنے کی دھمکیاں دیتا تھا،پولیس نے ملزم کے موبائل سے بچوں کی بنائی ہوئی 50سے زائد ننگی فلمیں بھی برآمد کر لیں ،ملزم نے اپنے   گھناؤنے  جرائم کا اعتراف کر لیا.

بھارتی نجی ٹی وی چینل’’انڈیا ٹی وی ‘‘ کے مطابق جے پور میں’’ استاد کا روپ دھارے ‘‘ ایسے درندہ صفت شخص کی کالی کرتوتوں کا انکشاف ہوا ہے جو اپنے پاس پڑھنے والے معصوم اور کم سن بچوں کو نہ صرف اپنی جنسی ہوس کا نشانہ بناتا تھا بلکہ بچوں کی ’’ننگی فلمیں ‘‘ بنا کر انہیں بلیک میل کرتا اور  رقم بھی بٹورتا تھا ،شیطان نما استاد نے 200سے زائد بچوں کو اپنی ہوس کا نشانہ بنایا.
ے پور کے علاقے رام گنج پولیس ہیڈ کوارٹر  میں  مذکورہ سکول کے 20سالہ طالب علم کے والد نے مقدمہ درج کرا یا ہے کہ سکول میں رمیز نامی ٹیچر ان کے بیٹے کا گذشتہ 6سال سے جنسی استحصال کر رہا ہے ،جب اس معاملے میں سکول انتظامیہ کو مطلع کیا گیا تو انہوں نے پولیس کو آگاہ کرکے ’’شیطان نما ٹیچر‘‘ کو گرفتار کرانے کی بجائے اس سے استعفیٰ لے لیا ،پولیس نے مقدمہ درج کر کے ملزم رمیز کو گرفتار کر لیا ہے جبکہ اس کے قبضے سے برآمد ہونے والے موبائل میں بچوں کے ساتھ درندگی اور جنسی ہوس کے50سے زائد ویڈیو کلپس بھی برآمد ہوئے ہیں .
پولیس کے مطابق ملزم رمیز نے 5سے 15سال کے بچوں کو اپنی ہوس کا نشانہ بنایا جبکہ ملزم بچوں کی پہلے گندی ویڈیو بناتا اور پھر اس ویڈیو کو بچوں کے اہل خانہ کو دکھانے کی دھمکیاں دے کر ان کے ساتھ بار بار جنسی زیادتی کرتا اور کئی بچوں سے اس نے بلیک میلنگ کے ساتھ خطیر رقم بھی وصول کی .پولیس کے پاس مقدمہ درج کرانے والے 20سالہ طالب علم کے والد کا کہنا ہے کہ میرا بیٹا 14سال کا تھا جب ملزم رمیز نے پہلی مرتبہ اسے اپنی جنسی ہوس کا نشانہ بنایا ، ملزم استاد نے میرے بیٹے کو اس بارے میں کسی سے کچھ بھی کہنے پر فیل کرنے کی دھمکی دی، جس سے وہ ڈر گیا اور ڈپریشن میں رہنے لگا.ایف آئی آر میں باپ نے الزام لگایا ہے کہ پورے 6 سال تک ملزم رمیز اُن کے بیٹے کو جسمانی اور ذہنی استحصال کا نشانہ بناتا رہا.
دوسری طرف رام گنج پولیس سٹیشن کے ایس ایچ او اشوک چوہان نے مقدمے کو درست قرار دیتے ہوئے کہا کہ ہمیں رمیز کے پاس سے چھوٹے بچوں کی 50 سے زائد فحش ویڈیوز ملی ہیں، جبکہ سکول کے دیگر  بچوں کا کہنا ہے کہ وہ پولیس کو ملزم رمیز کی کالی کرتوتوں کے 200سے بھی زائد ویڈیو کلپس مہیا کر سکتے ہیں ،ملزم اپنی گھناؤنی کرتوتوں پر مبنی ویڈیوز سکول کے عملے کو بھی دکھا چکا ہے ،لیکن سکول انتظامیہ نے اس درندے کو گرفتار کرنے کی بجائے اس سے استعفیٰ لے لیا اور گھر جانے دیا . پولیس کا کہنا تھا کہ ملزم نے اپنی کالی کرتوتوں کا اعتراف کر لیا ہے ،ہم اس کے دیگر ساتھیوں کے بارے میں بھی تحقیقات کر رہے ہیں ،جلد ہی اس شیطان کا چالان مکمل کر کے عدالت میں پیش کر دیا جائے گا .
..


قدرت میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں

تازہ ترین

Daily QUDRAT is an UrduLanguage Daily Newspaper. Daily QUDRAT is The Largest circulated Newspaper of Balochistan .

رابطے میں رہیں

Copyright © 2017 Daily Qudrat.

To Top