پاکستان کے اندر کسی بھی دہشتگرد گروپ کیلئے کوئی پناہ گاہ نہیں ہے،امریکی میڈیا

واشنگٹن(قدرت روزنامہ06فروری2017)امریکی میڈیا نے دہشتگردی کے خلاف جنگ میں پاکستان کی قربانیوں کو سراہتے ہوئے کہا ہے کہ پاکستان نے اپنے سرحدی علاقوں میںہر قسم کے دہشتگردی کے نیٹ ورکس کو ختم کرنے میں قابل ذکر کامیابیاں حاصل کی ہیں، پاک فوج کے آپریشن ضرب عضب کی کامیابی کی بدولت آج سرحدی علاقے مکمل طور پر دہشت گردوں سے کلیئر کرا لیے گئے اور عسکریت پسندوں کے نیٹ ورک کے تمام کمانڈ اینڈ کنٹرول ڈھانچے کو تباہ کر دیا گیا ہے ،پاکستان کے اندر کسی بھی دہشتگرد گروپ کے لئے کوئی پناہ گاہ نہیں ہے ، پاکستان پر لگائے جانے والے بے بنیاد الزامات ند ہونے چاہیں.معروف امریکی اخبار’’ واشنگٹن پوسٹ ‘‘میں شائع ہونے والے ایک مضمون میں کہا گیا ہے کہ پاکستان نے دہشتگردی کے خلاف جنگ میں بہت زیادہ قربانیاں دی ہیں ،پاکستان میں القاعدہ کی قیادت کی موجودگی کے حوالے سے بے بنیاد الزامات پاکستان اور امریکہ کی انٹیلی جنس کمیونٹی کے درمیان بے جوڑ تعاون جس کے تحت حالیہ برسوں میں القاعدہ کے بڑی تعداد میں لوگوں کو انصاف کے کٹہرے میں لایا گیا کو ختم کرسکتا ہے.

بدنام زمانہ القاعدہ کے رہنما ابوزبیدہ' رمذی بن الشعیبی' خالد شیخ محمد اور یونس الموریطانی کو پاکستان کے مؤثر تعاون کے باعث گرفتار کیا گیا تھا. سی آئی اے سے سابق ڈائریکٹر جارج ٹینیٹ سمیت سینئر امریکی حکام نے بھی القاعدہ سمیت دیگر دہشتگرد نیٹ ورکس کا کھوج لاگنے کیلئے شاندار پاکستانی تعاون کی توثیق کی ہے. اوشنگٹن پوسٹ کے مطابق پاکستان نے اپنے سرحدی علاقے میں کسی بھی قسم کے دہشتگردی کے نیٹ ورکس کو ختم کرنے کیلئے قابل ذکر کامیابیاں حاصل کیں ہیں.

..


قدرت میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں
Loading...

تازہ ترین

To Top