برطانیہ کا وہ بحری جہاز جس میں ایک ارب برطانوی پاﺅنڈ(ایک کھرب30ارب روپے)کا سونا موجود تھا اور250سال پہلے ڈوب گیا تھا

لندن(قدرت روزنامہ05فروري2017)برطانیہ کا وہ بحری جہاز جس میں ایک ارب برطانوی پاﺅنڈ(ایک کھرب30ارب روپے)کا سونا موجود تھا اور250سال پہلے ڈوب گیا تھا، کو سمندر سے نکالنے کی کوششیں شروع ہوچکی ہیں.

 لارڈ کلائیو نامی یہ جہاز 1763ءمیں جنوبی امریکہ کے ساحلوں پر ہسپانوی گولا لگنے سے جنگ کے دوران ڈوب گیا تھا.
یہ برطانوی جہاز ہسپانوی کالونی (کولونیا ڈی ساکرامانتو)پر قبضہ کرنے کی غرض سے جارہا تھالیکن گولا باری کی وجہ سے یہ ڈوب گیا اور ساتھ اس پر سوار272افراد پر مشتمل جہاز کا عملہ بھی ماراگیا.اس واقعہ کے254سال بعد اب ایک خزانے کے متلاشی ریوبن کولاڈو نے پروگرام بنایا ہے کہ اس جہاز کو سمندر کی تہہ سے نکالا جائے.
 00
ارجنٹائن سے تعلق رکھنے والے ریوبن کو امید ہے کہ وہ اربوں روپے کایہ سونا اور اس کے ساتھ دیگر نوادرات ڈھونڈ نکالے گا.اس کا کہنا ہے کہ اگر برطانیہ کا یہ جہاز نہ ڈوبتا تو آج جنوبی امریکہ میں ہسپانوی زبان کی جگہ انگریزی بولی جارہی ہوتی.”اگر اس بڑے جنگی جہاز سے دور سے بھی گولے مار دئیے جاتے تو ہسپانوی کالونی والا شہر تباہ ہوجاتا اور یہاں برطانوی حکومت قائم ہوجاتی“.ریوبن کافی عرصے سے اس جہاز کی تلاش پر روانہ ہونا چاہتا تھا لیکن یوروگوئے کی وزارت خزانہ سے اسے اجازت نہیں مل رہی تھی.اگر یہ جہاز مل جاتا ہے تو ریوبن کو جہاز کاآدھا خزانہ دے دیا جائے گا.خیال کیا جارہا ہے کہ جہاز کا ملبہ ساحل سمندر سے380گز دور 16فٹ سمندر کی تہہ میںموجود ہے.اس جہاز کی تلاش کے لئے 80غوطہ خور اپنی خدمت فراہم کریں گے جبکہ اس کی لاگت تقریباًچار ملین برطانوی پاﺅنڈ ہوگی.
 001
002
..


قدرت میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں
Loading...

تازہ ترین

To Top