نائیجیریا کے سب سے بڑے شہر لیگوس میں کئی قحبہ خانے ہیں جن میں ہزاروں خواتین لوگوں کو دعوتِ گناہ دیتی نظر آتی ہیں

n13

ابوجہ(قدرت روزنامہ04فروری2017) نائیجیریا کے سب سے بڑے شہر لیگوس میں کئی قحبہ خانے ہیں جن میں ہزاروں خواتین لوگوں کو دعوتِ گناہ دیتی نظر آتی ہیں. ان خواتین کو ”موت کی پریاں“ کہا جاتا ہے کیونکہ ان کی اکثریت جان لیوا مرض ایڈز کی مریض ہے.

میل آن لائن کی رپورٹ کے ان جسم فروش خواتین سے مہلک مرض لاکھوں مردوں میں پھیل رہا ہے اور انہیں موت سے ہمکنار کر رہا ہے. ایڈز کے حوالے سے شہر کی صورتحال اس قدر سنگین ہو چکی ہے کہ اس وقت ایک اندازے کے مطابق لیگوس میں ایڈز کے تصدیق شدہ مریضوں کی تعداد 12لاکھ سے تجاوز کر چکی ہے.
گزشتہ سال ہونے والے ایک سروے میں بتایا گیا ہے کہ لیگوس کی جسم فروش خواتین میں سے ایک چوتھائی مصدقہ طور پر ایڈز کی مریض ہیں، جن کی تعداد ہزاروں میں ہے. شہر کے قحبہ خانوں کی تصاویر منظرعام پر لانے والے فوٹوگرافر ٹون کوئینن کا کہنا ہے کہ ” لیگوس میں ایڈز کے مریض اس قدر زیادہ ہیں کہ جب میں اس شہر کی طرف جا رہا تھا تو میرے ڈرائیور نے طنزیہ طور پر کہا کہ ’آپ کار کی کھڑی سے ایچ آئی وی وائرس کو سونگھ کر محسوس کر سکتے ہو.‘شہر کے ایک قحبہ خانے کا نام بیڈیا (Badia) ہے جہاں انتہائی کم عمر جسم فروش لڑکیاں بھی موجود ہیں . بعض تو 14سال کی ہیں جو زندہ رہنے کے لیے اپنا جسم فروخت کر رہی ہیں.“
n14
..


قدرت میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں
Loading...

تازہ ترین

Daily QUDRAT is an UrduLanguage Daily Newspaper. Daily QUDRAT is The Largest circulated Newspaper of Balochistan .

رابطے میں رہیں

Copyright © 2017 Daily Qudrat.

To Top