کینیڈا امسال 40 ہزار غیر ملکیوں کو امیگریشن دے گا

اوٹاوا(قدرت روزنامہ03فروري2017)کینیڈا ٹرمپ انتظامیہ کی جانب سے سات ملکوں کے شہریوں پر ویزے کی پابندی کے فیصلے سے اپنی امیگریشن پالیسیوں میں ردِ بدل نہیں لائے گا.ترک خبر رساں ایجنسی کے مطابق کینیڈین شہریت و مہاجرین امور کے وزیر احمد حسین کا کہنا ہے کہ مہاجرین اور پناہ گزین کی تعداد میںامریکی صدرڈونلڈ ٹرمپ کی جانب سے عائد کردہ عمل درآمد سے ہماری پالیسیوں میںکسی قسم کی تبدیلی نہیں آئے گی.

انہوں نے اوٹاوا میں جاری کردہ اعلان میں کہا ہے کہ کینیڈا کے مہاجرین کے ہدف کا تعین' امریکی متنازعہ نقل مکانی و سیاحت عمل درآمد کے ذریعے نہیں ہوگا. مخالف سیاسی جماعتوں' حقوق انسانی کی تنظیموں اور مہاجرین کے وکلاء کی جانب سے کینیڈا کو مسلمان ملکوں سے مزید مہاجر قبول کرنے کے دبائو کا سامنا ہونے والے وزیر حسین کا کہنا تھا کہ ہماری امیگریشن کے حوالے سے منصوبہ بندی موجود ہے جس کا ہم تحفظ کرنے کا ارادہ رکھتے ہیں .انہوں نے کہا کہ ہم نے 40 ہزار مہاجرین کو قبول کرنے کا ہدف مقرر کررکھا ہے جس میں تبدیلی زیر بحث نہیں ہے.

..


قدرت میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں
Loading...

تازہ ترین

To Top