دہشتگرد ہونے کے شُبے میں امریکی ائیر پورٹ پانچ سالہ بچہ گرفتار، گھنٹوں حراست میں رکھا گیا ۔ وائٹ ہاﺅس کا دعویٰ

واشنگٹن (قدرت روزنامہ01فروري2017)وائٹ ہاﺅس کی جانب سے جاری بیان میں کہا گیا کہ امریکی ائیر پورٹ پر پانچ سالہ بچے کو مبینہ خطرے کے پیش نظر چار گھنٹے تک حراست میں رکھا گیا . ٹرمپ انتظامیہ نے پانچ سالہ بچے کو مبینہ طور پر سکیورٹی رسک قرار دیتے ہوئے چار گھنٹے تک ہتھکڑیاں پہنائے حراست میں رکھا.

پانچ سالہ بچہ اپنی ایرانی والدہ کے ساتھ موجود تھا اور ایسے سینکڑوں افراد میں شامل تھا جنہیں ٹرمپ کی جانب سے نئی امیگریشن پالیسی کے بعد حراست میںلیا گیا.ٹرمپ کے سیکرٹری نے اس تمام تر معاملے پر افسوس کا اظہار کرنے کی بجائے کہا کہ کسی کی جنس اور عمر کی وجہ سے اسے سکیورٹی رسک کے طور پر نہ پرکھنا سراسر غﷲط ہے. میڈیا میں جاری فوٹیج میں دکھیا گیا کہ پانچ سالہ بچے کی والدہ پریشانی کے عالم میں اپنے بچے کا انتظار کرتی ہوئی واشنگٹن میں موجود ایک ایئر پورٹ پر پائی گئی. بیٹے سے ملنے کے بعد ایرانی خاتون نے اپنے بیٹے کیلئژے انگریزی میں ہپی برتھ ڈے گایا جبکہ پانچ سالہ بیٹے نے بھی ماں سے لپٹ کر ماں کو بے تحاشہ بوسے دیئے. یہ منظر دیکھ کر ایئر پورٹ پر موجود افراد بھی خوش ہوئے. بعد ازاں خاتون نے میڈیا سے بات کرنے سے بھی انکار کردیا. اس واقعہ کے بد ایک مرتبہ پھر سے ٹرمپ اور ٹرمپ کی جانب سے تشکیل دی گئی نئی امیگریشن پالیسی کیخلاف احتجاج شروع ہوگیا ہے.

..


قدرت میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں
Loading...

تازہ ترین

To Top