قرآن مجید کےنسخے مسلمان ملکوں میں بھجوائیں

(قدرت روزنامہ15-فروری2017)حضرت پیر مولانا ذوالفقار احمد نقشبندی نے اپنے غیر ملکی سفر کے دوران ایک واقعہ سنایا کہ ایک مرتبہ سڈنی میں تھا‘ ایک عیسائی لڑکی نے وقت مانگا کہ میں آپ سے اسلام کے متعلق کچھ سوالات پوچھنا چاہتی ہوں‘ میں نے اسے ایک گھنٹہ دیا‘ وہ پہلے ایک گھنٹہ مجھ سے حضرت عیسیٰ علیہ السلام کے اٹھائے جانے اور ان ک یواپس آنے کے بارے میں سوال پوچھتی رہی پھر اس نے قیامت کے دن کے بارے میں پوچھا‘ پھر جنت اور دوزخ کے بارے میں پوچھا‘ حتیٰ کہ اس نے اسلام کے بارے میں بہت زیادہ تفصیلات پوچھیں‘ جب اس کی تسلی ہو گئی تو میں نے پوچھا کہ اب آپ بتائیں کہ کوئی سوال پوچھنا ہے کہنے لگی کہ اب میرے دل میں اسلام کے بارے میں اور کوئی سوال نہیں ہے میں سمجھتی ہوں کہ اسلام بہت ہی زیادہ خوبصورت مذہب ہے جب اس نے خوبصورت کا لفظ استعمال کیا تو میں سمجھا کہ شاید اب یہ اسلام قبول کر لے گی لہٰذا میں نے اس سے پوچھا کہ کیا آپ اسلام قبول کرنے کے بارے میں سوچیں گے؟ وہ کہنے لگی کہ آپ مجھے یہ بتائیں کہ یہ سارے کا سارا اسلام قرآن میں موجود ہے. میں نے کہا ہاں! وہی تو بنیادی ماخذہے‘ کہنے لگی کہ کیا آپ کے پاس قرآن ہے؟ میں نے کہ ہاں میرے پاس قرآن ہے جب میں نے قرآن مجید دکھایا تو وہ کہنے لگی کہ آپ ایسا کریں کہ اس کے کئی نسخے مسلمان ملکوں میں بھجوائیں اور انہیں کہیں کہ تمہیں اس قرآن کے مطابق اپنی زندگیوں کو تبدیل کرنے کی ضرورت ہے.

اب بتائیں کہ میں اس کو کیاجواب دیتا‘ میرے دوستو! اگر ہم اپنے جسم پر اسلام کا قانون نافذ کریں گے‘ اگر ہم نے اپنے آپ کو بدلنا شروع کر دیا تو اللہ رب العزت ہمارے ان اعمال کی برکت سے دنیا کے دوسرے انسانوں کو بھی بدل دیں گے...


قدرت میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں
Loading...

تازہ ترین

To Top