جب ایک طوائف عورت میرے نبی کریم ﷺ کے پاس آئی اور مد دکی درخواست کی ۔۔۔۔! ایمان افروز واقعہ جو آپ کو بھی ضرور پڑھنا چاہئے

mo8-1

اسلام آباد(قدرت روزنامہ13فروری2017) نوجوانوں کی ایک مجلس سے مولانا طارق جمیل نے روح کو جھنجوڑ دینے والا بیان سناتے ہوئے کہا کہ ایک بار آپ ؐکے پاس ایک گانے والی سارہ نامی عورت آئی جو کافر تھی اور پیشہ کے لحاظ سے طوائف تھی. اس نے آپ ؐ سے آکر کہا کہ اے اللہ کے نبی ؐ میری مدد کریں تو آپ ؐ نے اس سے کہا کہ کلمہ پڑھتی ہو؟ اس نے کہا کہ نہیں پڑھتی.

تو آپؐنے کہا کہ تم تو گانے والی تھی، کیا مکے کے نوجوانوں نے تمہارا گانا سننا چھوڑ دیا؟ تو اس عورت نے جواب دیا کہ مکے کے بڑے بڑے سردار غزوہ بدر میں قتل ہوئے تب سے میرا گانا کوئی نہیں سنتا.مولانا طارق جمیل نے بیان کرتے ہوئے کہا کہ آپ ؐنے اس گانے والی عورت کی بات سنی اور کہا کہ میرے اہل بیت ! اٹھو اور اس عورت کا دامن بھر دو. مولانا طارق جمیل نے کہا کہ آپ ؐنے صحابہ سے مدد کا نہیں فرمایا کہ کوئی اٹھے اور یہ کہہ دے کہ ہم سے طوائف کو پیسے دلوائے جا رہے ہیں. اسی لئے آپ ؐ نے اپنے اہل بیت سے اس عورت کی مدد کرنے کیلئے کہا...


قدرت میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں
Loading...

تازہ ترین

Daily QUDRAT is an UrduLanguage Daily Newspaper. Daily QUDRAT is The Largest circulated Newspaper of Balochistan .

رابطے میں رہیں

Copyright © 2017 Daily Qudrat.

To Top