ادلے کا بدلہ​

اسلام آباد (قدرت روزنامہ06فروری2017)ایک لومڑی ایک چیل کی سہیلی بن گئی. دونوں میں اتنا پیار ہوا کہ ایک دوسرے کے بغیر رہنا مشکل ہو گیا.

ایک دن لومڑی نے چیل سے کہا. "کیوں نہ ہم پاس رہیں. پیٹ کی فکر میں اکثر مجھے گھر سے غائب رہنا پڑتا ہے. میرے بچے گھر میں اکیلے رہ جاتے ہیں اور میرا دھیان بچوں کی فکر میں لگا رہتا ہے. کیوں نہ تم یہیں کہیں پاس ہی رہو. کم از کم میرے بچوں کا تو خیال رکھو گی." چیل نے لومڑی کی بات سے اتفاق کیا اور آخرکار کوشش کرکے رہائش کے لیے ایک پرانا پیڑ تلاش کیا جس کا تنا اندر سے کھوکھلا تھا. اس میں شگاف تھا. دونوں کو یہ جگہ پسند آئی. لومڑی اپنے بچوں کے ساتھ شگاف میں اور چیل نے پیڑ پر بسیرا کر لیا. کچھ عرصہ بعد لومڑی کی غیر موجودگی میں چیل جب اپنے گھونسلے میں بچوں کے ساتھ بھوکی بیٹھی تھی، اس نے اپنا اور اپنے بچوں کا پیٹ بھرنے کے لیے لومڑی کا ایک بچہ اٹھایا اور گھونسلے میں جا کر خود بھی کھایا اور بچوں کو بھی کھلایا. جب لومڑی واپس آئی تو ایک بچہ غائب پایا. اس نے بچے کو ادھر ادھر بہت تلاش کیا مگر وہ نہ ملا. آنکھوں سے آنسو بہانے لگی. چیل بھی دکھاوے کا افسوس کرتی رہی. دوسرے دن لومڑی جب جنگل میں پھر شکار کرنے چلی گئی اور واپس آئی تو ایک اور بچہ غائب پایا. تیسرے دن بھی ایسا ہی ہوا. اس کا ایک اور بچہ غائب ہو گیا. چیل لومڑی کے سارے بچے کھا گئی. لومڑی کو چیل پر شک جو ہوا تھا، وہ پختہ یقین میں بدل گیا کہ اس کے تمام بچے چیل ہی نے کھائے ہیں مگر وہ چپ رہی. کوئی گلہ شکوہ نہ کیا. ہر وقت روتی رہتی اور خدا سے فریاد کرتی رہتی کہ .

"اے خدا! مجھے اڑنے کی طاقت عطا فرما تاکہ میں اپنی دوست نما دشمن چیل سے اپنا انتقام لے سکوں." خدا نے لومڑی کی التجا سن لی اور چیل پر اپنا قہر نازل کیا. ایک روز بھوک کے ہاتھوں تنگ آ کر چیل تلاش روزی میں جنگل میں اڑی چلی جا رہی تھی کہ ایک جگہ دھواں اٹھتا دیکھ کر جلدی سے اس کی طرف لپکی. دیکھا کچھ شکاری آگ جلا کر اپنا شکار بھوننے میں مصروف ہیں. چیل کا بھوک سے برا حال تھا. بچے بھی بہت بھوکے تھے. صبر نہ کرسکی. جھپٹا مارا اور کچھ گوشت اپنے پنجوں میں اچک کر گھونسلے میں لے گئی. ادھر بھنے ہوئے گوشت کے ساتھ کچھ چنگاریاں بھی چپکی ہوئی تھیں. گھونسلے میں بچھے ہوئے گھاس پھوس کے تنکوں کو آگ لگ گئی. گھونسلا بھی جلنے لگا. ادھر تیز تیز ہوا چلنے لگی. گھونسلے کی آگ نے اتنی فرصت ہی نہ دی کہ چیل اپنا اور اپنے بچوں کا بچاؤ کر سکے. وہیں تڑپ تڑپ کر نیچے گرنے لگے. لومڑی نے جھٹ اپنا بدلہ لے لیا اور انہیں چبا چبا کر کھا گئی.(حکایات رومی)

..


قدرت میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں

تازہ ترین

Daily QUDRAT is an UrduLanguage Daily Newspaper. Daily QUDRAT is The Largest circulated Newspaper of Balochistan .

رابطے میں رہیں

Copyright © 2017 Daily Qudrat.

To Top