جامشورو کی سندھ یونیورسٹی میں طلبہ کو لانے والی بس کی ٹکر کے باعث طالبہ جاں بحق

جامشورو (قدرت روزنامہ16فروری2017) جامشورو کی سندھ یونیورسٹی میں طلبہ کو لانے والی بس کی ٹکر کے باعث طالبہ جاں بحق ہوگئ ہے.نجی ٹی وی کی ایک رپورٹ کے مطابق شعبہ فزکس کے آخری سال کی طالبہ شائستہ میمن یونیورسٹی آرہی تھیں کہ پوائنٹ نے انہیں ٹکر ماری، جس وجہ سے وہ بری طرح زخمی ہوگئیں.

شائستہ میمن کو فوری طور پر لیاقت میڈیکل یونیورسٹی ہسپتال پہنچایا گیا، مگر وہ جانبر نہ ہوسکی.طالبہ کی ہلاکت کے بعد یونیورسٹی کے طلبہ نے جامشورو سے کراچی جانے والے روڈ پر احتجاجی دھرنا دیا، جس وجہ سے ٹریفک کی روانی معطل ہوگئی. طلبہ کے مطابق یونیورسٹی پوائنٹ (بس) ڈرائیورز کی غفلت کے باعث یہ ایک ہی ہفتے میں دوسرا حادثہ ہے، اس سے قبل بھی یونیورسٹی کا ایک طالب علم پوائنٹ بس سے گر کر ہلاک ہوا تھا. طلبہ کے احتجاج کے بعد یونیورسٹی کے وائس چانسلر (وی سی) فتح محمد برفت پولیس افسران سمیت دھرنے پر بیٹھے ہوئے طلبہ کے پاس پہنچے، وی سی نے طلبہ کو یقین دہانی کروائی کہ پوائنٹ ڈرائیور کے خلاف قانونی کارروائی کی جائے گی.وی سی کی یقین دہانی کے بعد طلبہ نے احتجاج ختم کیا. دوسری جانب ہلاک ہونے والی طلبہ کے لاش کا پوسٹ مارٹم کرکے ورثاء کو اطلاع کردی گئی. واضح رہے کہ سندھ یونیورسٹی کے پوائنٹس (بسوں) سے طلبہ کی ہلاکت کا رواں ماہ یہ دوسرا واقعہ ہے، اس سے قبل 8 فروری کو جہانزیب آرائیں نامی طالب علم پوائنٹ بس سے گر کر ہلاک ہوا تھا...


قدرت میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں
Loading...

تازہ ترین

To Top