خود کش حملہ آور کی شناخت کر لی گئی ہے ،دہشت گرد کا ہدف موقع پر موجود پولیس افسران تھے،رانا ثنا اللہ

n3

لاہور (قدرت روزنامہ13فروری2017)صوبائی وزیر قانون راناثنا اللہ نے کہا ہے کہ خود کش حملہ آور کی شناخت کر لی گئی ہے ،دہشت گرد کا ہدف موقع پر موجود پولیس افسران تھےتاہم دوسری جانب کالعدم جماعت الاحرار کی جانب سے دھماکے کی ذمہ داری قبول کر لی گئی ہےجبکہ مبینہ خودکش حملہ آور کی تصویر بھی جاری کر دی گئی ہے.

 جیو نیوز سے گفتگو کرتے ہوئے رانا ثنا اللہ کا کہنا تھاکہ دھماکے کے بعد جائے وقوعہ سے اکٹھے کئے حملہ آور کے اعضاکے فرانزک ٹیسٹ کے بعد دہشت گرد کی شناخت کر لی گئی ہے .
حملہ آور پیدل ہی لوگوںکے ہجوم کا سہارا لیتے ہوئے احتجاج میں داخل ہوا اور خود کو دھماکے سے اڑا لیا لیکن خوش قسمتی سے قریب کھڑی وین کے باعث نقصان کم ہوا.انہوں نے کہا کہ ہم کسی بھی احتجاج کرنے والے کو مال روڈ پر بیٹھنے کی اجازت نہیں دیتے ،اگر ان کوروکا جاتا ہے تو کہتے ہیں کہ حکومت ہمیں ہمارے حقوق کیلئے آواز نہیں اٹھانے دیتی.آج احتجاج میں جتنے لوگ شریک تھے انہیں طاقت کے بل پر روکنا ہمارے لئے زیادہ مسئلہ نہیں تھا،لیکن ہم نے ایسا نہیں کیا اور اپنے سینئر افسران کو موقع پر بھیجا کہ وہ لوگوں سے مذاکرات کریں اور امن و امان سے احتجاج ختم ہو جائے .اگر ہم نے طاقت کا استعمال کرنا ہوتا تو افسران کو موقع پر بھیجنے کا کوئی جواز نہیں بنتا تھا.وزیر قانون کا کہناتھاکہ ہم نے ایک پروگرام منعقد کیا تھا جس میںوزیراعلی نے شرکت کرنی تھی اور وہاں بڑی تعداد میں پولیس موجود ہونی تھی،دہشتگردوں نے اس پروگرام کو نشانہ بنانا تھا لیکن آخری لمحات میں سکیورٹی خدشات کی وجہ سے وزیراعلی کی تقریب شرکت منسوخ کردی گئی .حملہ آور نے جب پنجاب اسمبلی کے باہر پولیس افسران اورعوام کا ہجوم دیکھا تو وہاںخود کو دھماکے سے اڑا لیا.اگر آج فارماسیوٹیکل احتجاج نہ کرتی تو حملہ آور گرفتار ہوجاتا اور یہ افسوسناک واقعہ پیش نہ آتا.انہوں نے پی ایس کے حوالے سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ ہم میچ لاہور میں کروانے کیلئے پُر عزم ہیں ،بس دعا ہے کہ ہمارے مہمان پاکستان آنے کاارادہ ترک نہ کردیں ہم انہیں فول پروف سکیورٹی دینے کیلئے بھی تیار ہیں.
واضح رہے کہ کالعد م جماعت الاحرار کے ترجمان نے لاہور دھماکے کی ذمہ داری قبول کرتے ہوئے بیان جاری کر دیاہے جس میں کہا گیاہے کہ لاہور میں خودکش دھماکہ ان کے ساتھی نصراللہ عرف زبیح اللہ نے کیاجبکہ مبینہ خود کش حملہ آور کی تصویر بھی میڈیا کے اداروں کو جاری کی گئی ہے.
..


قدرت میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں
Loading...

تازہ ترین

Daily QUDRAT is an UrduLanguage Daily Newspaper. Daily QUDRAT is The Largest circulated Newspaper of Balochistan .

رابطے میں رہیں

Copyright © 2017 Daily Qudrat.

To Top