فکسر کو نشان عبرت بنادیا جائے’ آفریدی کا مطالبہ

دبئی(قدرت روزنامہ14فروری2017) آل رائونڈر شاہد آفریدی نے بھی فکسرز کو نشان عبرت بنانے کا مطالبہ کردیا ہے. انہوں نے کہا کہ جب تک پی سی بی کوئی مثال قائم نہیں کرے گا کھلاڑی فکسنگ اور کرپشن میں ملوث ہوتے رہیں گے.

جو ایک ابر ایسی کسی چیز میں پکڑا جائے اسی پھر سے کرکٹ کھیلنے کی اجازت ہی نہیںدینا چاہئے. پی ایس ایل میں شرجیل خان اور خالد لطیف کی مبینہ طور پر فکسنگ تنازع مین الجھنے پر شاہد آفریدی نے انتہائی مایوسی کا اظہار کیا ہے. دبئی میں میڈیا سے ابت کرتے ہوئی شاہد آفریدی کا کہنا تھا کہ میں ماضی میں بھی یہ کہتا رہا ہوں کہ جب تک پی سی بی ایسے پلیئرز کے حوالے سے کوئی مثال قائم نہیں کرتا تب تک ایسی چیزوں کو روکنا بہت مشکل ہو گا. میرے نزدیک یہ بھی ویسی ہی صورتحال ہے کیونکہ آپ پھر بدنام کھلاڑیوں کو دوبارہ کرکٹ میں آنے کا موقع فراہم کررہے ہیں. شاہد آفریدی چاہتے ہیں کہ ایک بار جو کھلاڑی فکسنگ جیسی چیزوں میں ملوث پایا جائے تو اس کی زندگی بھر ڈومیسٹک کرکٹ تک کھیلنے کی اجازت نہ دی جائے انہوں نے کہا کہ ایسی پابندی کا کیا فائدہ جس کے بعد وہی کھلاڑی پھر سے واپس آجائیں. میں سمجھتا ہوں کہ جب تک کوئی درست مثال قائم نہیں کی جائے گی تب تک ایسی چیزوں کو روکا نہیں جاسکتا.

..


قدرت میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں
Loading...

تازہ ترین

To Top