مہمند ایجنسی میں خودکش حملے کے نتیجے میں خاصہ دار فورس کے 3 اہلکاروں سمیت 5 افراد جاں بحق، 3 زخمی

b8

پشاور(قدرت روزنامہ15فروری2017) وفاق کے زیر انتظام قبائلی علاقے فاٹا کی مہمند ایجنسی میں خودکش حملے کے نتیجے میں خاصہ دار فورس کے 3 اہلکاروں سمیت 5 افراد جاں بحق جبکہ 3 زخمی ہوگئے.

پاک افواج کے شعبہ تعلقات عامہ (آئی ایس پی آر) کی جانب سے جاری ہونے والے بیان کے مطابق مہمند ایجنسی کی تحصیل غلانئی میں 2 خودکش حملہ آوروں نے پولیٹیکل ایڈمنسٹریشن کی رہائشی کالونی میں داخل ہونے کی کوشش کی.

تاہم لیویز فورس نے حملہ آوروں کو اندر جانے سے روکا، جس پر ایک حملہ آور نے مرکزی گیٹ کے قریب اپنے آپ کو اڑا لیا، جبکہ دوسرے حملہ آور کو سیکیورٹی فورسز نے ہلاک کردیا.دھماکے کے نتیجے میں 3 سیکیورٹی اہلکار اور 2 عام شہری جاں بحق جبکہ 3 زخمی ہوئے، جنھیں طبی امداد کے لیے ہسپتال منتقل کردیا گیا.

آئی ایس پی آر کے مطابق سیکیورٹی ایجنسیز کو افغانستان سے خود کش بمباروں کی مہمند ایجنسی میں داخلے کی رپورٹس ملی تھیں، تاہم دہشت گردی کی کوشش ناکام بنادی گئی.دوسری جانب واقعے کی ذمہ داری کالعدم تحریک طالبان پاکستان (ٹی ٹی پی) سے الگ ہونے والے گروپ جماعت الاحرار نے قبول کرنے کا دعویٰ کیا.اس سے قبل ستمبر 2016 میں بھی مہمند ایجنسی کی تحصیل انبار کے علاقے پائی خان میں نماز جمعہ کے دوران خود کش دھماکا ہوا تھا، جس کے نتیجے میں 30 سے زائد افراد ہلاک ہوگئے تھے.اس دھماکے کی ذمہ داری بھی جماعت الاحرار نے قبول کرنے کا دعویٰ کیا تھا.

..


قدرت میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں
Loading...

تازہ ترین

Daily QUDRAT is an UrduLanguage Daily Newspaper. Daily QUDRAT is The Largest circulated Newspaper of Balochistan .

رابطے میں رہیں

Copyright © 2017 Daily Qudrat.

To Top