مشعال خان کے نام پر رقم اکٹھی کرنے والے فراڈیے سرگرم

ردان (قدرت روزنامہ19-اپریل-2017)عبد الولی خان یونیورسٹی کے طالبعلم مشعال خان کے تشدد کے بعد قتل نے پوری قوم کو ہلا کر رکھ دیا ہے. مشعال خان کے قتل کے بعد اہل خانہ نے انصاف کی اپیل کی ہے.

لیکن اس دردناک اور افسوسناک واقعہ پر بھی لوگ پیسے بنانے کے طریقے ایجاد کر رہے ہیں جو اس قوم کے مدہ ہونے اور بے حسی کا جیتا جاگتا ثبوت ہے.مشعال خان کے قتل کے بعد اب مشعال خان کے نام پر رقم اکٹھی کرنے والے فراڈیے منظر عام پر آگئے ہیں. مشعال خان کے لیے رقم سماجی رابطوں کی ویب سائٹس کے ذریعے اکٹھا کی جا رہی ہے. فیس بُک پر ایک خاتون نے شہریوں سے اپیل کی کہ وہ مشعال خان کے والد کے لیے رقم دئے گئے بنک اکاؤنٹ میں جمع کروائیں. مشعال کے لیے رقم مانگنے والے خود کو بلاگر ظاہر کررہے ہیں.لوگوں نے مشعال خان اور اس کے والد کے نام پر رقم دینے کی اپیل شروع کر دی ہے. ان فراڈیوں سے شہریوں کو خبردار رہنے کی ہدایت کی گئی ہے . خیال رہے کہ مشعال خان کے والد محترم نے مشعال خان کے قتل کے بعد رقم لینے سے انکار کیا تھا. ان کا کہنا تھا کہ مجھے کسی قسم کی کوئی امداد نہیں چاہئیے اگر کوئی رقم دینا چاہتا ہے تو کسی خیراتی ادارے کو دے دی تاکہ کسی کابھلا ہو سکے...


قدرت میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں
Loading...

تازہ ترین

To Top