بڑی تباہی کا سبب،مردان یونیورسٹی واقعے پر اسفندیارولی کا شدیدردعمل،تشویشناک پیش گوئی کردی

پشاور(قدرت روزنامہ15-اپریل-2017) عوامی نیشنل پارٹی کے مرکزی صدر اسفندیار ولی کی عبدالولی خان یونیورسٹی میں طلباء کے ہاتھوں ساتھی طالب علم کو قانون ہاتھ میں لے کر قتل کرنے کی شدید مذمت کرتے ہوئے واقعے کی جوڈیشل انکوائری کا مطالبہ کیا ہے، ان خیالات کا اظہار انہوں نے ہفتہ کو جاری کردہ بیان میں کیا. انہوں نے کہا کہ تعلیمی درسگاہوں میں زیر تعلیم نوجوان نسل اور معاشرے میں صبر و برداشت کا مادہ ختم ہونا نیک شگون نہیں اور یہ بڑی تباہی کا باعث بن سکتا ہے، لہٰذا قانون ہاتھ میں لینے والے عناصر کا تعین کرنا ضروری ہے ، انہوں نے کہا کہ تحقیقات کے بعد اصل صورتحال سامنے آئے گی اور اگر کسی شخص نے بھی کوئی جرم کیا ہے تو اس کیلئے ملک میں قانون موجود ہے ، انہوں نے کہا کہ سانحے کی جوڈیشل انکوائری کر کے ذمہ داروں کا تعین کیا جائے تا کہ مستقبل میں ایسے واقعات سے بچا جا سکے.

آخر میں انہوں نے تمام لوگوں سے اپیل کی کہ وہ صبر و تحمل اور برداشت کا دامن ہاتھ سے نہ چھوڑیں ...


قدرت میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں
Loading...

تازہ ترین

To Top