سائبر سیکورٹی کے خدشات کے پیش نظر خیبر پختونخوا حکومت نے سرکاری اجلاسو ں میں سمارٹ فون لے جانے پر پابندی عائدکردی گئی

پشاور (قدرت روزنامہ02-جنوری-2017)سائبر سیکورٹی کے خدشات کے پیش نظر خیبر پختونخوا حکومت نے سرکاری اجلاسو ں میں سمارٹ فون لے جانے پر پابندی عائدکردی گئی ہے .سمارٹ فون پرحساس اداروں اور سرکاری اداروں نے تحفظات کا اظہار کیا ہے اور موقف اختیارکیا ہے کہ سائبر سیکورٹی کااہم مسئلہ اس سے پیدا ہو سکتا ہے سمارٹ فون استعمال کرنے والے شخص کی نقل و حرکت اس کی دوسرے کے ساتھ بات چیت اورا س کا پرائیویٹ ڈیٹا انفارمیشن پاکستان دشمن ملکوں تک پہنچ سکتا ہے ذرائع نے بتایا ہے کہ سرکاری اجلاسوں میں سمارٹ فونز لے جانے پرپابندی عائد کرنے کی سفارشات کی گئی ہے کیونکہ سمارٹ فون سویچ آئن بھی ہو گا تب بھی یہ نہ خود سمارٹ فون رکھنے والے شخص بلکہ جس کمرے میں ہو گا اس کی آڈیو اورویڈیو ریکارڈنگ آٹو میٹک کر سکے گاس اس طرح پاکستان کی سائبر سیکورٹی میں دراڑ پڑ گئی ہے .

حساس اداروں نے پہلے بھی شرکا کو اجلاس میں سمارٹ فون نہ لانے کی ہدایات کی ہے ...


قدرت میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں
Loading...

تازہ ترین

To Top