مقبوضہ کشمیر میں جاری جدوجہد آزادی سے بھارتی فوج بوکھلاہٹ کا شکار ہوگئی

سری نگر(قدرت روزنامہ10-مارچ-2017) مقبوضہ کشمیر میں جاری جدوجہد آزادی سے بھارتی فوج بوکھلاہٹ کا شکار ہوگئی.کشمیریوں کی جاسوسی کے لئے بجلی کے بلب استعمال کئے جانے کا انکشاف ہوا ہے.

تفصیلات کے مطابق بھارتی حکومت نے کشمیرمیں بجلی کے بلب تقسیم کرنے کے لئے ”اجالہ سکیم متعارف کرائی جس کے تحت مقبوضہ  وادی میں ایل ای ڈی بلب تقسیم کئے گئے .ماہرین کے مطابق بجلی کے ان بلبوں میں خفیہ کیمرے اور خصوصی چپس استعمال کی گئی ہیں. ان کیمروں اور چپس کا مقصد کشمیری عوام کی نقل و حمل پر نظر رکھنا ہے.اجالہ سکیم کے تحت کشمیر بھر میں250ہندوستانی روپے میں مارکیٹ میں دستیاب بلب صرف بیس ہندوستانی روپوں میں  تقسیم کیا گیا. اس حوالے سے کشمیر بھر میں سوشل میڈیا پر ایک بحث چھڑ گئی ہے.بحث میں شریک افراد نے خدشات کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ برہان وانی کی نقل و حمل اور ان کی شہادت میں بھارتی فوج کو انہیں ڈیوائسز کے ذریعے مدد ملی .جبکہ گذشتہ دنوں اس بحث میں اس وقت شدت آگئی جب بھارتی فوج نے دو کشمیری نوجوانوں کو شہید کردیا.کشمیری سوشل میڈیا صارفین کے مطابق انہیں ڈوائسز کے ذریعے بھارتی فوج نے ریکی کرکے ان نوجوانوں کو شہید کیا. ایک کشمیری نوجوان نے سوشل میڈیا پر ویڈیو شیئر کی ہے جس میں اجالا سکیم کے تحت تقسیم کیے گئے بلب کو کھول کر دکھایا گیا ہے کہ کیسے اس میں بھارتی حکومت کی جانب سے آلات جاسوسی فِٹ  کیے گئے ہیں...


قدرت میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں
Loading...

تازہ ترین

To Top