عمران کے دھرنے میں طاہر القادری دیدار کرائیں گے یا نہیں ؟ آخر وہ خبر آہی گئی جس کا سب کو انتظار تھا

40

اسلام آباد(قدرت روزنامہ01نومبر2016) پاکستان عوامی تحریک کے سربراہ ڈاکٹر طاہر القادری نے کہا ہے کہ ایک وزیر اعلی نے ایک وزیر اعلی پر راستے بند کر دیئے ،وزیر اعظم اسلام آباد کو بند کر کے بیٹھا ہے ،ملک کو خانہ جنگی کی طرف دھکیلا جا رہا ہے. ابھی ابتدا ہے آگے آگے دیکھئے ہوتا ہے کیا ایمر جنسی کی صور ت میں اپنی تمام بین الاقوامی مصروفیات ترک کر دوں گا ، بادشاہت و آمریت سے نجات کے لیے تحریک انصاف اور عوام کو بہت قربانیاں دینی ہونگی.

آج تو شیلنگ ہوئی ہم نے تو 17جون 2014کو ماڈل ٹاؤن اور 31اگست کو اسلام آباد میں سیدھی گولیوں کا سامنا بھی کیا ہے . پیر کو اپنے ایک ٹی وی انٹرویو میں انہوں نے کہاکہ شریف برادران جمہوریت پر یقین رکھتے ہیں نہ قانونی سیاسی اقدار پر، یہ کبھی بھی انصاف اور انسانی حقوق کے لیے راستے نہیں کھولیں گے. سیدھی سی بات ہے اگر آپ نے چوری نہیں کی تو تلاشی دے دیں . آئین ،جمہوریت، قانون ان کے نرغے میں ہیں، تمام اداروں کو انہوں نے اپنا غلام بنا رکھاہے. پولیس ان کی ذاتی ملازم ہے.

انہوں نے کہا کہ جسٹس باقر علی نجفی نے سانحہ ماڈل ٹاؤن پر جو رپورٹ مرتب کی تھی ہم آج تک اسے حاصل کرنے لیے عدالت میں ہیں ، اس رپورٹ کے اندر ان کی قتل و غارت گری کی تفصیل رقم ہے اس لیے اسے منظر عام پر نہیں آنے دے رہے. انصاف اور کرپشن کے خاتمے کے لیے ہم نے لاشیں دیں، 90لوگوں کو گولیاں کھاتے دیکھا ہے پھر بھی ہماری جدوجہد جاری ہے اور آخری سانس تک ظالموں کے خلاف جاری رہے گی. ہم ظلم کے خلاف جدو جہد کرنے والے ہر شخص کے ساتھ ہیں . تحریک انصاف کے کارکنان اگر استقامت کے ساتھ ڈٹے رہے تو اپنے مقاصد میں ضرور کامیاب ہوں گے.پاکستان عوامی تحریک PTI کیساتھ ہے .ہم ان کے شانہ بشانہ ہیں.ہمارے کارکنان ان کے ساتھ کھڑے نظر آئیں گے.میں PTIکے کارکنان کو حوصلہ دیتا ہوں ، یہ ابھی ابتداء ہے ابھی جدوجہد کے بہت سے مراحل آئیں گے ہم ہر مرحلے میں ان کے شانہ بشانہ ہوں گے.انہوں نے پارٹی رہنماؤں سے گفتگو میں کہا کہ شریف برادران نا جائز دولت بچانے کیلئے کسی حد تک بھی جا سکتے ہیں ، یہ اپنی ذات کیلئے فیڈریشن ،ملکی سلامتی سمیت سب کچھ داؤ پر لگا سکتے ہیں ،اس وقت سانحہ ماڈل ٹاؤن کے قصاص ،پانامہ لیکس کے احتساب اور نیوز لیکس کے عتاب سے دوچار ہیں اور بوکھلاہٹ میں ریاستی طاقت کا بے رحم استعمال کر رہے ہیں .یہی سب کچھ انہوں نے ماڈل ٹاؤن میں کیا تھا، اب ان کی باری آنے والی ہے .انہوں نے کہا کہ اسلام آباد جزیرہ بن چکا ہے اور اسے ملک سے کاٹا جارہا ہے . سڑکیں،موٹر ویز،بس سروس سب کچھ بند کر دیا گیا کیا یہ جمہوریت ہے؟ انہوں نے کہاکہ جو موٹر ویز غیر ملکی بنکوں کے پاس رہن پڑی ہیں انہیں بند کرنے کا انہیں کیا حق حاصل ہے.ایک منتخب وزیر اعلیٰ کی جس طرح کئی گھنٹے تک تذلیل کی گئی وہ لولی لنگڑی جمہوری تاریخ کا ایک اور سیاہ باب ہے .انہوں نے کہاکہ پولیس ہمارے عہدیداروں کے گھروں میں چھاپے مار رہی ہے . چادر اور چار دیواری کا تقدس پامال کر رہی ہے. خواتین اور بچوں کی تذلیل کی جا رہی ہے .یہ پہلے بھی جوتے کھا کر ملک سے نکلے اور اب پھر اسی راستے پر چل رہے ہیں .یہ جانتے ہیں کہ عوامی تحریک کے کارکن ان اوچھے ہتھکنڈوں سے ڈرنے اور جھکنے والے نہیں ہیں. ان شاء اللہ تعالی سانحہ ماڈل ٹاؤن کے 14شہدا کا خون انکے گلے کا پھندا بنے گا .

..


قدرت میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں
Loading...

تازہ ترین

Daily QUDRAT is an UrduLanguage Daily Newspaper. Daily QUDRAT is The Largest circulated Newspaper of Balochistan .

رابطے میں رہیں

Copyright © 2017 Daily Qudrat.

To Top