پاکستانی ہیکر رافع بلوچ نے گوگل کے براﺅزر گوگل کروم اور فائرفوکس میں ایک خامی پکڑ کر 5ہزار ڈالر (تقریباً 5لاکھ روپے)حاصل کر لیے

نیویارک(قدرت روزنامہ23مارچ2017)انٹرنیٹ ہیکنگ کا نام سنتے ہی کسی تخریب کاری کا گمان ہوتا ہے مگر بہت سے ہیکرز تعمیری راستے بھی اختیار کرتے ہیں اور مختلف کمپنیوں کی پراڈکٹس میں خامیاں ڈھونڈ کر بھاری رقوم کماتے ہیں. ایسے ہی ایک پاکستانی ہیکر رافع بلوچ نے گوگل کے براﺅزر گوگل کروم اور فائرفوکس میں ایک خامی پکڑ کر 5ہزار ڈالر (تقریباً 5لاکھ روپے)حاصل کر لیے ہیں.

ویب سائٹ zdnet.com کی رپورٹ کے مطابق رافع بلوچ نے ان براﺅزرز کے ایڈریس بارز میں موجود ایسی خامیوں کی نشاندہی کی تھی جن کے ذریعے ہیکرز صارفین کے ڈیٹا تک رسائی حاصل کر سکتے تھے. رپورٹ کے مطابق رافع نے اپنے ایک بلاگ میں اس کی وضاحت کرتے ہوئے بتایا ہے کہ ”ان براﺅزرز میں موجود خامی کی وجہ سے ہیکرز صارفین سے ایسی ویب سائٹس سرچ کروا سکتے تھے جو صارفین کا ڈیٹا چوری کرتی ہیں. خامی کے باعث صارفین کے سامنے یہ بری ویب سائٹ کسی اصل اور جائز ویب سائٹ کے روپ میں ظاہر ہوتی تھی. اس خامی کی وجہ ان براﺅزرز کی بعض زبانیں تھیں جو دائیں سے بائیں شروع ہوتی ہیں،مثلاً عربی اور اردو وغیرہ. اگر ہم ان براﺅزرز دائیں سے بائیں کوئی ایڈریس لکھتے ہیں جیسا کہ 127.0.0.1/?/http://example.com تو براﺅزرز اسے خودکار طریقے سے http://example.com/??/127.0.0.1. کی شکل میں دکھاتے ہیں.اس خامی کے باعث ہیکرز صارفین کو سپام ای میل، ٹوئٹر یا فیس بک پر ایسے لنک دے سکتے ہیں جو بظاہر تو کسی اصل ویب سائٹ کے ہوں گے لیکن دراصل وہ کوئی ایسے وائرس کی حامل ویب سائٹ ہو گی جو صارفین کا ڈیٹا چوری کر لے گی.“ اس خامی کی نشاندہی پر گوگل نے رافع کو 5ہزار ڈالر انعام دیا ہے...


قدرت میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں
Loading...

تازہ ترین

To Top