دبئی کے حکمراں حاکم دبئی الشیخ محمد بن راشد کو ملک و قوم کی خدمت میں ہمہ وقت متحرک رہ نماؤں میں شمار کیا جاتا ہے

دبئی(قدرت روزنامہ15-فروری-2017)متحدہ عرب امارات کے عالمی تجارتی وسیاحتی مرکز دبئی کے حکمراں حاکم دبئی الشیخ محمد بن راشد کو ملک و قوم کی خدمت میں ہمہ وقت متحرک رہ نماؤں میں شمار کیا جاتا ہے.عرب ٹی وی سے بات میں انہوں نے اس راز سے بھی پردہ اٹھایا کہ وہ اگرانہیں دن میں 24 کے بجائے 84 گھنٹے میسر آئیں تو وہ کیا کچھ کرسکتے ہیں الشیخ محمد بن راشد اپنی صبح کا آغاز ورزش سے کرتے ہیں.

اس کے بعد گھڑ سواری، موٹرسائیکل سواری، دفاتر کا دورہ، ملازمین سے ملاقاتیں، مختلف منصوبوں کے جائزے، لینے کے بعد امارات کی دوسری ریاستوں ابو ظہبی، دبئی اور دیگر شہروں کا وزٹ کرتے ہیں جہاں وہ اعلیٰ حکام کے ساتھ اجلاس منعقد کرتے اور جاری منصوبوں پر غور کے بعد کچھ وقت عام لوگوں کی خوشی غمی میں شریک ہوتے اور آخر میں کچھ وقت اپنے بچوں کے ساتھ گذارتے ہیں.مگر وہ ایک ہی روز یہ سب کچھ کیسے ترتیب دے پاتے ہیں.انہوں نے مزاحیہ انداز میں جواب دیا کہ اگر ہمارے پاس اماراتی حکام کے پاس اور امارتی قوم کے پاس 84گھنٹے ہوں تو ہم دبئی جیسے چار شہر آباد اور دو متحدہ عرب امارات بناسکتے ہیں ...


قدرت میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں
Loading...

تازہ ترین

To Top