جب نبی کریم ﷺ یہ کام کروا سکتے ہیں تو ہم کیوں نہیں؟ سعودی عالم کے فتوے نے سب کو سوچنے پر مجبور کر دیا

ka99

ریاض (قدرت روزنامہ13فروری2017)مسلم ممالک میں مذہبی رہنمائی کی ذمہ دای عموماً مردوں کے پاس ہی رہی ہے اور خواتین کیلئے اس کام کو عموماً شجر ممنوعہ قرار دیا جاتا رہا ہے مگر سعودی عرب کے ایک ممتاز عالم دین نے اب اس ضمن میں انقلابی فتویٰ جاری کردیا ہے عرب نیوز کی پورٹ کے مطابق کونسل آف سکالرز کے کن شیخ عبداللہ المانیہ کا کہنا ہے کہ خواتین بھی اس ممتاز کونسل کی رکن بننے کا حق رکھتی ہیں انہوںنے امہات المومنین حضرت عائشہ ؓ اور حضرت حفصہ ؓ کی مثال دیتے ہوئے کہاکہ یہ پاکیزہ ہستیاں نجی اور عوامی مسائل پر اپنی آرا کا اظہار کرتی تھیں او مسلمانوں کی رہنمائی کا اہم فریضہ سرانجام دیتی تھی جوکہ ہمارے لئے ایک مثال ہیں .شیخ عبداللہ کا کہنا تھا کہ خواتین کونسل کی رکن بن سکتی ہیں بشرط یہ کہ مرد اور خواتین ارکان کے درمیان میل جول نہ ہو انہوںنے خواتین ارکان کو مرد ارکان کی نشست گاہ کے ساتھ ملحقہ حال میں جگہ دینے کی تجویز دی جہاں سے وہ اپنے نظریات اور خیالات اکاظہار کرسکتی ہےان کا مزید کہنا تھا کہ اگر خواتین علمی استطاعت رکھتی ہوں تو وہ فتویٰ بھی دے سکتی ہے .

جب ان سے سوال کیا گیا کہ یہ توقع کی جاسکتی ہے کہ مستقبل میں خواتین حج بھی دیکھنے کو ملیں گی تو ان کا کہنا تھا کہ یہ ذمہ دای صرف مردوں تک محدود رہنی چاہیے کیونکہ علما کی ایک بڑی تعداد کچھ معاملات میں خواتین کی گواہی کو قابل قبول قرار نہیں دیتی .

..


قدرت میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں
Loading...

تازہ ترین

Daily QUDRAT is an UrduLanguage Daily Newspaper. Daily QUDRAT is The Largest circulated Newspaper of Balochistan .

رابطے میں رہیں

Copyright © 2017 Daily Qudrat.

To Top